اداکارہ بشریٰ انصاری نے خود اپنے شوہر کو طلاق کیوں دی تھی

لاہور (ویب ڈیسک) نامور اور سینیئر پاکستانی اداکارہ بشریٰ انصاری نے پہلی مرتبہ ایک ویب شو میں اپنی 36 سالہ شادی کے خاتمے کی وجہ بتادی۔ڈرامہ و فلم انڈسٹری کی لیجنڈ اداکارہ بشریٰ انصاری نےایک ویب شو کے دوران اداکارہ و میزبان میرا سیٹھی کو انٹرویو دیتے ہوئے بتایا کہ انہوں نے

گزشتہ سال اپنے شوہر اقبال انصاری کو طلاق دے دی، شادی کے 36 سال بعدشوہر کو طلاق دینے کا فیصلہ اُن کا اپنا تھا۔بشریٰ انصاری نے میرا سیٹھی کے ویب شو میں اپنی طلاق اور اُن حالات کے بارے میں اظہار خیال کیا جس نے انہیں زندگی کا سب سے بڑا فیصلہ لینے پر مجبور کیا۔اداکارہ نے کہا کہ زندگی کےبرے وقت سے نکلنے کا حل ’طلاق‘ ہے، میں نے اپنی شادی کے 36 سال بعد شوہر کو طلاق دینے کا فیصلہ کیا کیونکہ میرے پاس طلاق دینے کا حق تھا۔ میرے والد نے میرے لیے یہ کام کیا تھاکہ میری بیٹی جب چاہے طلاق دے سکتی ہے۔بشریٰ انصاری نے کہا کہ میں وہ عورت نہیں ہوں جسے طلاق ہوئی بلکہ میں نے خود اپنے شوہر کو طلاق دی تھی۔اپنے انٹرویو میں اداکارہ نے کہا کہ جب تک ہمیں سمجھ آئی کہ ہماری زندگی میں بہت مسائل ہیں اور ہم ایک دوسرے کے ساتھ نہیں رہ سکتےتب تک بہت دیر ہوچکی تھی کیونکہ بچے اسکول جانے لگ گئے تھے۔انہوں نے کہا کہ اس لیے میں جب بھی مشکل میں ہوتی تو سوچتی تھی کہ یہ وقت مشکل ہے یا پھر طلاق کے بعد والا مشکل ہوگا کیوں کہ میرے پاس دو بیٹیاں ہیں، اور اگلی زندگی میں بھی یہی مسائل رہے تو بہتر یہی ہے کہ اسی زندگی کو برداشت کیا جائے اور ایسے ہم نے 36 سال گزار لیے۔بشریٰ انصاری نے کہا کہ جب میری بیٹیوں کی شادی ہوگئی اور اُن کے بچےبھی ہوگئے تو لگا کہ اب وقت آگیا ہے کہ ایک دوسرے کو ریلیف دیا جائے، حالانکہ آج کل ایسا نہیں ہوتا۔واضح رہے کہ بشریٰ انصاری نے 1978 میں پروڈیوسر اقبال انصاری سے شادی کی تھی جس سے اُن کی دو بیٹیاں ناریمن انصاری اور میرا انصاری ہیں۔گزشتہ سال انہوں نے اقبال انصاری سے طلاق لے لی تھی۔ جس کے بعد یہ خبریں سامنے آئیں کہ انہوں نے اداکار وہدایت کار اقبال حسین سے دوسری شادی کرلی ہے تاہم اداکارہ اپنی نجی زندگی سے متعلق زیادہ تر خاموش ہی دکھائی دیتی ہیں۔

Comments are closed.