انہیں 1981 میں ایک دن اچانک کیا ہوا تھا ؟

لاہور (ویب ڈیسک) ہر انسان اپنے اندر کوئی نہ کوئی دکھ کی داستان لیے دنیا کے سامنے مسکراتے چہرے کے ساتھ گھوم رہا ہوتا ہے۔ اسی طرح بالی ووڈ کنگ شارخ خان بھی اپنی فیملی کے کچھ اندرونی معاملات کا کافی خیال رکھتے ہیں۔تاہم کچھ دن پہلے انھوں نے اپنے ایک انٹرویو میں

اپنی بڑی بہن شہناز لالہ رخ جان کی ذہنی حالت کے متعلق بتایا کہ ان کی یہ حالت ہمارے والد کے انتقال کے بعد ہوئی۔شارخ خان کے والد کا انتقال ۱۹۸۱ میں سرطان کے باعث ہوا تھا۔شارخ خان کی بہن ان سے ۶ سال بڑی ہے اور وہ اپنے والد کے بہت قریب تھی۔ شارخ خان کی بہن شہناز لالہ رخ خان باہر گئی ہوئی تھی جب وہ گھر واپس آ ئی تو ان کے والد کی وفات ہو چکی تھی۔ والد کی اچانک موت سے شہنازلالہ رخ کو بہت بڑا ذہنی جھٹکا لگا اور وہ اپنا ذہنی توازن کھو بیٹھی جس کے باعث ابھی تک ان کی ذہنی حالت ٹھیک نہیں ہے۔والد کی وفات کے ۲ سال تک شہناز لالہ رخ خان نہ روئی نہ ہی کچھ بولی والد کو کھونے کا غم انھیں اندر سے ختم کر چکا تھا۔شاہ رخ نے مزید بتایا کہ فلم دل والے دلہنیا لے جائے گے کی سوئٹر لینڈ میں عکسبندی کے دوران ان کی بہن کا علاج بھی وہاں چل رہا تھا۔

Comments are closed.