اہم رہنما اور وفاقی وزیر کے خلاف آمدن سے زائد اثاثوں کی درخواست سماعت کے لیے مقرر

اسلام آباد (ویب ڈیسک) سپریم کورٹ نے وفاقی وزیر خسرو بختیار کے آمدن سے زائد اثاثوں سے متعلق اپیل سماعت کے لیے مقرر کردی۔نجی ٹی وی چینل کی رپورٹ کے مطابق چیف جسٹس پاکستان جسٹس گلزار احمد نے وفاقی وزیر خسرو بختیار اور ان کے بھائی وزیر خزانہ پنجاب ہاشم جواں

بخت کے خلاف آمدن سے زائد اثاثوں سے متعلق درخواستوں کی سماعت کے لئے 3 رکنی بینچ تشکیل دے دیا۔جسٹس عمر عطا بندیال، جسٹس منصور علی شاہ اور جسٹس محمد علی مظہر پر مشتمل بینچ 16 ستمبر کو خسرو بختیار، ہاشم جواں بخت کے خلاف درخواستوں کے علاوہ چئیرمین نیب و ڈی جی نیب کے خلاف توہین عدالت کی درخواستوں کے ساتھ چیئرمین نیب اور ڈی جی نیب کے خلاف توہین عدالت کی درخواست پر بھی سماعت کرے گا۔واضح رہے کہ ایڈووکیٹ احسن عابد نے خسرو بختیار، ہاشم جواں بخت اور چئیرمین نیب کے خلاف درخواستوں دائر کی تھیں۔ اس سے قبل انہوں نے الیکشن کمیشن میں بھی دونوں بھائیوں کی نااہلی کے لئے درخواست دائر کی تھی لیکن الیکشن کمیشن نے اسے ناقابلِ سماعت قرار دے دیا تھا۔

Comments are closed.