ایک خاندان ابھی تک بلڈنگ میں موجود

کراچی (ویب ڈیسک) کراچی کے نسلہ ٹاور سے رہائشیوں کی نقل مکانی کی مہلت کا آج آخری دن ہے، ایک خاندان اب بھی عمارت میں مقیم ہے۔مکینوں نے شکوہ کیا ہے کہ ان کا لاکھوں روپے مالیت کا سامان اب بھی عمارت میں موجود ہے۔واضح رہے کہ کراچی کے نسلہ ٹاور کے رہائشیوں کو

عمارت مکمل خالی کرنے کے لیے آج تک کی مہلت دی گئی ہے۔انتظامیہ نے نسلہ ٹاور کی عمارت کو اپنی تحویل میں لے لیا ہے۔سپریم کورٹ کی جانب سے نسلہ ٹاور گرانے کے لیے جدید آلات کا استعمال کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔عدالتِ عظمیٰ کے حکم پر نسلہ ٹاور کو گرا دیا جائے گا۔عدالتی فیصلے کے مطابق عمارت گرانے کے اخراجات نسلہ ٹاور کا مالک ادا کرے گا، مالک رقم نہ دے تو کمشنر کراچی پلاٹ بیچ کر رقم وصول کریں۔عدالتی فیصلے میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ عمارت گرانے کا عمل 27 اکتوبر کے بعد 1 ہفتے میں مکمل کیا جائے۔

Comments are closed.