تحریک انصاف کا امیدوار مقابلے سے کیوں دستبردار ہو گیا ؟

کوئٹہ(ویب ڈیسک) سینیٹ کے ضمنی انتخاب میں کاغذات نامزدگی واپس لینے کی مدت ختم ہوگئی جبکہ پانچ امیدوار انتخاب سے دستبردار ہوگئے ہیں۔الیکشن کمیشن حکام کے مطابق ہفتہ کو مرحوم سینیٹر میر حاصل بزنجو کی وفات کے بعد خالی ہونے نشست پر کاغذات نامزدگی واپس لینے کے آخری دن ہزارہ ڈیموکریٹک پارٹی

کے ڈاکٹر اصغر علی چنگیزی،پی ٹی آئی کے نواب خان دمڑ، محمد بلال، سید عبدالشکور آغا،نور محمد عادل نے کاغذات نامزدگی واپس لے لئے جبکہ ایک امیدوار سردار نور احمد بنگلزئی کے کاغذات نامزدگی پہلے ہی مسترد کئے جاچکے ہیں۔ پانچ امیدواروں کے کاغذا ت نامزدگی واپس لینے اور ایک کے مسترد ہونے کے بعد اب سینیٹ کے ضمنی انتخاب میں چار امیدوار بلوچستان عوامی پارٹی کے خالد بزنجو، جمعیت علما ء اسلام کے غوث اللہ، پی ٹی آئی کے ڈاکٹر منیر بلوچ،بلوچستان نیشنل پارٹی کے محمد علی مد مقابل ہیں۔ واضح رہے کہ سینیٹ کی خالی نشست پر ضمنی انتخاب 12ستمبر کو ہوگا۔قبل ازیں تحریک انصاف شمال مشرق ریجن کے صدر نواب خان دمڑ نے صوبائی وزیر تعلیم سردار یار محمد رند سے ملاقات کی اور سینیٹ کی نشست پر پارٹی امیدوار ڈاکٹر منیر احمد کے حق میں دستبرداری کا اعلان کر تے ہوئے اپنے کاغذات نامزدگی واپس لے لئے۔ اس موقع پرسردار یار محمد رند نے کہا کہ ہم نواب خان دمڑ کے شکر گزار ہے کہ انہوں نے پارٹی قیادت کی ہدایت پر اپنے کاغذات نامزدگی واپس لینے کا فیصلہ کیا۔ اس فیصلے سے تحریک انصاف مضبوط ہو گی۔انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف بلوچستان کے پارلیمانی پارٹی کا اجلاس 8 ستمبر کو ہو گا جس میں سینیٹ انتخابات کے حوالے سے حتمی فیصلہ کیا جائیگا۔

Sharing is caring!

Comments are closed.