توفیق بٹ نے انوکھا واقعہ بیان کردیا

لاہور (ویب ڈیسک) نامور کالم نگار توفیق بٹ اپنے ایک کالم میں لکھتے ہیں ۔۔۔۔۔۔۔تعریف اور خوشامد میں فرق ہوتا ہے۔ ہمارے ہاں تعریف کا رجحان آہستہ آہستہ کم ہوتا جا رہا ہے۔ خوشامد کا بڑھتا جا رہا ہے۔ خصوصاً ہمارے حکمران تو اس حد خوشامد پسند ہوتے ہیں کسی روز ان کی کوئی خوشامد نہ کرے

وہ بار بار اپنی نبض چیک کرتے ہیں وہ کہیں فوت تو نہیں ہو گئے؟۔ ہمارا خیال تھا خان صاحب پاکستان کی تاریخ کے واحد حکمران ہوں گے جو وزیر اعظم بننے کے بعد بھی ویسے ہی خوشامد کو پسند نہیں کریں گے جیسے وزیر اعظم بننے سے پہلے ان کے بارے میں تاثر تھا وہ خوشامد کو پسند نہیں کرتے۔ اب وہ اپنے اس وصف سے بھی محروم ہو گئے ہیں اور ان کے جو مقابل ہیںان کا حال یہ ہے نواز شریف وزیر اعظم کی حیثیت سے علاج کے لئے ایک بار لندن تشریف لے گئے۔ یہ رمضان المبارک کا مہینہ تھا۔ ان کی جماعت کے ایک ایم این اے ان کی عیادت کے لئے لندن پہنچے۔ بوقت عیادت وہ ان سے کہنے لگے”قائد محترم میں آپ کی عیادت کے لئے لندن آنے سے پہلے اپنے ایک پرانے دوست سے ملنے گیا۔ اس نے مجھ سے پوچھا ”تم ہر برس رمضان المبارک میں عمرے پر جاتے ہو، اس بار کیوں نہیں گئے؟“…. میں نے اپنے اس دوست کو جواب دیا ”اس بار میں حج پر جا رہا ہوں“۔ اس نے مجھ سے پوچھا ”رمضان المبارک میں کون سا حج ہوتا ہے؟۔ میں نے اس سے کہا “ پگلے میں اپنے قائد محترم کی عیادت کے لئے جا رہا ہوں ان کی عیادت ان کا دیدار میرے لئے حج ہی ہے“…. قائد محترم کے کمرے میں اس وقت پارٹی کے بہت سے اور رہنما بھی موجود تھے، اس کے بعد سب سے زیادہ عزت اور اہمیت اس ایم این اے کو ملی جو عیادت کو حج سمجھ رہا تھا…. آر پی او گوجرانوالہ جناب ریاض نذیر گاڑا کی میں دل سے عزت اس لئے کرتا ہوں اپنی بے شمار خصوصیات اور ان گنت خوبیوں کی بنیاد پر وہ واقعی قابل عزیز ہیں۔ ان سے بھی گزارش ہے کمشنر گوجرانوالہ سے بات کریں ، کسی روز دونوں مل کر وہاں چلے جائیں۔ وہاں جا کر یقیناانہیں احساس ہو گا کتنا اہم مقام کتنی محرومیوں کا شکار ہے۔ ان محرومیوں کو اگر دور کر دیا جائے گجرات کیا پورے پاکستان کے لوگوں کے لئے پوائنٹ یہ ایک نعمت اور رحمت سے کم نہیں ہو گا…. پنجاب کے سوئے ہوئے محکمہ جنگلات کو بھی اس حوالے سے میں جگانا چاہتا ہوں۔ مجھے نہیں معلوم پنجاب کے محکمہ جنگلات کے وزیر اور سیکرٹری کون ہیں؟ وہ جو بھی ہیں اس ” پبی فاریسٹ پارک“ کی ویرانیوں کو دیکھ کر ان کی نااہلیوں کا اچھی طرح اندازہ کیا جا سکتا ہے!!

Sharing is caring!

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *