جمشید چیمہ نے چند کروڑ روپے بچانے کی خاطر پی ٹی آئی کو الیکشن سے ہی آؤٹ کرا دیا ۔۔۔۔۔

لاہور (ویب ڈیسک) پیپلزپارٹی نے کھیل میں واپس آنے کا جو تاثر ابھارا ہے اس کا فائدہ نئے اور اچھے امیدواروں کی صورت میں مل سکتا ہے۔ سکڑتا ہوا ووٹ بینک ایک بار پھر واپس آ سکتا ہے لیکن یہ تاثر بلدیاتی انتخابات تک کام دے گا۔ لاہور کا بلدیاتی الیکشن جو جماعت جیتی اسے

اگلے عام انتخابات میں انتظامی سہولیات مل جائیں گی۔نامور صحافی اشرف شریف اپنے ایک کالم میں بتاتے ہیں ۔۔۔۔۔۔۔۔ مقامی حکومت کے انتخابات میں پیپلزپارٹی نے لاہور کو ہدف بنا لیا اور مرکزی قیادت نے معاملات ضلعی تنظیم پر نہ چھوڑے تو اچھے نتائج آ سکتے ہیں۔ سماج میں مخصوص انتہا پسندانہ نظریات کو بے قابو ہونے سے روکنے کے لیے ایسی جماعتوں کا طاقتور ہونا ضروری ہے جو ایک متوازن موقف کے ساتھ سماج کی جمہوری اقدار میں دلچسپی رکھتی ہیں۔ اس سارے منظر نامے میں تحریک انصاف زیر بحث نہیں آ سکی۔ وجہ وہ اہم موڑ تھا جہاں تحریک انصاف غلط امیدوار کو ٹکٹ دے بیٹھی۔ اپنے چند کروڑ بچانے کے لیے جمشید اقبال چیمہ نے پوری جماعت کی اہلیت پر جو سوال اٹھا دیا ہے وہ مستقبل کے امکانات کو متاثر کرے گا۔

Comments are closed.