خاتون اول بشریٰ بی بی کی ذاتی دلچسپی اور خواہش پر حکومت نے اہم قدم اٹھانے کا فیصلہ کر لیا

لاہور( ویب ڈیسک) خاتون اول بشریٰ عمران کی خصوصی دلچسپی پر پنجاب بھر میں صوفی ازم اور سائنس و ٹیکنالوجی ریسرچ مراکز قائم کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ پہلے مرحلے میں شیخ ابوالحسن شازلی صوفی ازم اور سائنس و ٹیکنالوجی ریسرچ سینٹر کا لاہور میں آغاز کیا جائیگا۔ اس ریسرچ سینٹر میں اسلام، صوفی ازم،

مذہبی افکار، رواداری، سائنس و ٹیکنالوجی اور جدید علوم پر تحقیق و تدوین ہو گی۔ خاتون اول کے غریب و تعلیم دوست اقدامات کا سلسلہ جاری ہے جسکے تحت معاشرے کے پسماندہ اور لاچار طبقات کو ترقی کے مساوی مواقع فراہم کئے جائیں گے۔ قبل ازیں خاتون اول مختلف شہروں میں قائم پناہ گاہوں، لنگر خانوں، دارالامان اور چائلڈ پروٹیکشن بیورو کے انتظامات کا جائزہ لینے کے ساتھ ساتھ انکی نمایاں بہتری کیلئے کوشاں ہیں۔ شیخ ابوالحسن شازلی ریسرچ سینٹر کو غریب و نادار طلبہ و طالبات، پسماندہ طبقات اور تعلیم دوست افراد کیلئے ہمیشہ کھلا رکھا جائیگا۔ ریسرچ سینٹر کو دارالامان، چائلڈ پروٹیکشن بیورو، پنجاب بھر میں قائم قید خانون خصوصاً بچوں اور خواتین کی جیلوں کے علاوہ اسکول، کالج، یونیورسٹیز اور سرکاری و نجی مذہبی تعلیمی اداروں سے منسلک کیا جائیگا۔ ریسرچ سینٹر کو عالمی سطح پر جدید تحقیق کے مسلمہ اداروں جے اسٹور اور آکسفورڈ، کیمرج اور ہاورڈ جیسے ممتاز تعلیمی اداروں کی ای لائبریریز سے منسلک کیا جائیگا اور اسکی صوبہ بھر میں ریموٹ رسائی دی جائیگی تاکہ لوگ گھر بیٹھے اس سے مستفید ہو سکیں۔ ریسرچ سینٹر میں طلباوطالبات کو ملکی و غیر ملکی جامعات میں داخلہ اور اسکالر شپ کیلئے رہنمائی فراہم کرنے کیلئے ہائیرایجوکیشن کے تعاون سے آن لائن رہنمائی مرکز پورٹل قائم کیا جائیگا جبکہ تمام سنٹرز میں راہنمائی مرکز کائونٹرز بھی قائم کئے جا رہے ہیں جس سے لاکھوں طلباو طالبات مستفید ہو سکیں گے۔ پہلے مرحلے میں گورنمنٹ کالج یونیورسٹی، لاہور کالج فار ویمن یونیورسٹی، جامعہ نعیمیہ، اوقاف ریسرچ سنٹرز کیساتھ جدید تحقیق کیلئے منسلک کرنے کے لئے ایم او یو کئے جا رہے ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *