خان صاحب : الیکشن کے لیے تیار ہو جاؤ۔۔۔

کراچی (ویب ڈیسک)سابق صدر آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ یوسف رضا گیلانی کے انتخاب میں فتح کا مارجن کم ہے اسے زیادہ ہوناچاہئے تھا۔ نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں میزبان حامد میر سے گفتگو کرتے ہوئے آصف علی زرداری نے کہا کہ یوسف رضا گیلانی کو چیئرمین سینیٹ بنانے کا فیصلہ

پی ڈی ایم کرے گی۔یوسف رضا گیلانی کی 5ووٹوں سے جیت کم ہے ہماری جیت 20ووٹوں کی ہونی چاہئے تھی، میں کراچی میں بیٹھا ایک سندھی سیاستدان ہوں مجھے نہیں پتا کہ ہمارے 15ووٹ کہاں چلے گئے، میرا علاج چل رہا ہے صحت اب بہتر ہے، اسلام آباد بھی پمز میں ڈاکٹر سے علاج کروانے آیا ہوں۔ آصف علی زرداری کا کہنا تھا کہ تحریک انصاف کے کچھ لوگ میرے پاس آئے تھے لیکن ناکام ہو کر گئے، ان لوگوں نے اپنی بات کی تو میں یہ کہہ کر اٹھ گیا کہ میری میٹنگ ہے، میں نے بلاول کو کہا کہ یہ لوگ فراڈ ہیں انہیں بھگاؤ، عمران خان اسمبلیاں توڑتے ہیں تو ہم الیکشن کیلئے تیار ہیں۔پروگرام میں ن لیگ کے رہنما میاں جاوید لطیف اور پیپلز پارٹی کے رہنما آغا رفیع اللہ بھی شریک تھے پیپلز پارٹی کے رہنما آغا رفیع اللہ نے کہا کہ سینیٹ الیکشن میں جمہوریت کی فتح ہوئی ہے،ن لیگ کے رہنما میاں جاوید لطیف نے کہا کہ چاروں صوبوں کے ارکان اسمبلی نے عمران خان پر عدم اعتماد کردیا ہے، عمران خان کو اصولی طور پر اب قومی اسمبلی سے اعتماد کا ووٹ لیناچاہئے۔عمران خان کو لانے والوں کو اب ملک پر رحم کرنا چاہئے،ویڈیو پر علی حیدر گیلانی سے تحقیقات نہیں ہونی چاہئے، علی حیدر گیلانی سے تحقیقات کرنی ہے تو پھر چاروں پی ٹی آئی اراکین سے بھی تحقیقات کی جائے، عمران خان نے بلوچستان سے 70کروڑ دینے والے عبدالقادر کو منتخب کروایا ۔میاں جاوید لطیف کا کہنا تھا کہ اپوزیشن کے لانگ مارچ اور تحریک عدم اعتماد کو اب کس طرح نہیں روکا جاسکتا، لانگ مارچ یا عدم اعتماد کا فیصلہ پی ڈی ایم کے پلیٹ فارم پر ہوگا، ذاتی طور پر وزیراعظم کیخلاف عدم اعتماد کے حق میں نہیں ہوں، یوسف رضا گیلانی کی فتح کے باوجود عدم اعتماد کی طرف نہیں جانا چاہئے، لانگ مارچ اور اس کے بعد انتخابات ہی حل ہے۔

Comments are closed.