دو شادیاں ناکام ہونے کے بعد تیسری شادی

کراچی (ویب ڈیسک) سینئر اداکارہ عتیقہ اوڈھو کا کہنا ہے کہ وہ شادی پر مکمل یقین رکھتی ہیں اسی لیے انہوں نے دو شادیاں ناکام ہوجانے کے باوجود تیسری شادی کی ۔ جس وقت ان کا تیسرا نکاح ہو رہا تھا اس وقت وہ گود میں اپنے نواسے کو لیے ہوئے بیٹھی تھیں۔ایک میگزین کو دیے گئے

انٹرویو میں اداکارہ عتیقہ اوڈھو نے بتایا کہ پہلی شادی کی ناکامی کے بعد انہوں نے اپنی ہی مرضی سے دوسری شادی کی مگر اتفاق سے وہ بھی کامیاب نہ ہوسکی اور ان کی دونوں شادیاں طلاق پر ختم ہوئیں۔ وہ شادی کے رشتے پر بھرپور یقین رکھتی ہیں، اس لیے انہوں نے دو شادیاں ناکام ہونے کے باوجود تیسری مرتبہ زائد العمری میں شادی کرنے کا فیصلہ کیا۔اداکارہ کے مطابق انہوں نے تیسرے شوہر ثمرعلی خان کو خود شادی کی پیش کش کی تھی۔ انہوں نے تمام شادیاں پسند اور پیار سے کیں۔ وہ خاموشی کے ساتھ نکاح کرنا چاہتی تھیں لیکن جب انہوں نے اپنے بچوں کو بات بتائی تو سب نے کہا کہ شادی کی تقریب منعقد کی جائے۔عتیقہ اوڈھو کے مطابق ان کی شادی میں ان کے بچے، نواسے اور پوتے پوتیاں شریک ہوئے جب کہ ان کے شوہر کے بچے بھی شادی میں شریک تھے۔ جس وقت ان کا نکاح ہوا اس وقت وہ اپنی گود میں اپنے نواسے کو لیے بیٹھی تھیں۔خیال رہے کہ عتیقہ اوڈھو نے 2012 میں پاکستان تحریک انصاف کے رہنما ثمر علی خان سے شادی کی تھی۔ ثمر علی خان 2013 سے 2018 کے دوران رکنِ سندھ اسمبلی رہ چکے ہیں۔

Comments are closed.