دیویا بھارتی : سالوں بعد حیران کن حقیقت سامنے آگئی

ممبئی(ویب ڈیسک)بولی وڈ میں باصلاحیت فنکاروں کی کمی نہیں تاہم کچھ فنکار ایسے بھی گزرے ہیں جو شوبز کے افق پر بہت تھوڑے وقت کے لیے چمکے مگران کے مداح آج بھی ان کو یاد کرتے ہیں۔بھارتی ادکارہ دیویا بھارتی کاجول سے پہلے مشہور زمانہ فلم’’دل والے دلہنیا لے جائیں گے‘‘میں کام کرنے والی تھیں

مگر بدقسمتی سے بالکونی سے گرکر چل بسیں۔ اداکارہ دیویا بھارتی محض انیس سال کی عمر میں اس دار فانی سے کوچ کر گئیں تاہم اس مختصر عمر میں انہوں نے وہ نام کیا جو بہت سے لوگوں کو ان سے ڈبل زندگی میں بھی میسر نہیں آسکا۔ انہیں بولی وڈ میں تیزی سے ترقی کرنے والی اداکارہ مانا جاتا ہے۔ لیکن ان کی زندگی اور کیریئر ایک ایسے وقت میں ختم ہوا جب وہ ابھی اپنی کامیابیوں سے محظوظ ہونا شروع ہوئی تھیں۔ بولی وڈ کے مقبول مصنف جے دیپ سنگھ گل لکھتے ہیں کہ دیویا 1994میں آنے والی فلم لاڈلہ میں شیتل جیٹلی ،1993 میں فلم ڈر میں کرن اور 1995میں آنے والی فلموں ہم آپ کے ہیں کون اور دل والے دلہنیا لے جائیں گے میں کام کرنے کے معاہدے کرچکی تھیں تاہم وقت نے انہیں مہلت نہ دی اور مذکورہ فلموں میں ہیروئنز کو بدلنا پڑا۔انہوں نے 1992 میں صرف اٹھارہ سال کی عمر میں ایک سال میں بارہ فلموں میں کام کرکے اپنی صلاحیتوں میں کالوہا منوایا۔ان کی مقبول فلموں میں دل کا کیا قصور، شعلہ اور شبنم، دل ہی تو ہے ، دیوانہ ، جان سے پیارا، گیت اور دیگر فلمیں شامل ہیں۔

Comments are closed.