ریاست مدینہ یا اندھیر نگری ۔۔۔۔؟؟

جہلم (ویب ڈیسک) جہلم کے مشین محلہ نمبر 2 کے علاقے سے لے جائی گئی 16 سالہ سال کی لڑکی کچھ دیر بعد واپس آگئی۔پولیس کے مطابق مبینہ طور پر لے جائی گئی لڑکی کا کہنا ہے کہ وہ اپنی مرضی سے ان لوگوں کے ساتھ گئی تھی، اس لیے ملزمان کے خلاف کارروائی نہ کی جائے۔

لڑکی کے والد نے پہلے اپنی بیٹی کے لے جائے جانے کا پرچہ درج کروایا تھا مگر اب وہ کہہ رہا ہے کہ ملزمان کے خلاف کوئی کارروائی نہیں کرنی ہے۔پولیس نے معاملے پر آسان راستہ ڈھونڈلیا اور کہہ دیا کہ جب مدعی نہیں چاہتا تو کارروائی کس کے خلاف کریں؟اس سوال کا جواب کون ڈھونڈے گا کہ کہیں ملزمان بااثر تو نہیں؟،

Sharing is caring!

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *