سیالکوٹ واقعہ : مرکزی ملزم نے خود آگے بڑھ کر جرم کا اعتراف کیوں کیا ؟

سیالکوٹ (ویب ڈیسک) پنجاب پولیس نے سیالکوٹ واقعہ کے مرکزی ملزم کو گرفتار کرلیا۔ملزم کے خلاف پولیس کی مدعیت میں دہشت گردی کی دفعات کے تحت مقدمہ درج کرلیا گیا ہے۔ترجمان پنجاب پولیس کے مطابق پولیس نے زدکوب کرنے اور اشتعال انگیزی میں ملوث ملزمان میں سے ایک مرکزی ملزم فرحان ادریس کو گرفتار کر لیا ہے۔

مرکزی ملزم فرحان ادریس کو ویڈیو میں زدوکوب کرتے اور اشتعال دلاتے دیکھا جا سکتا ہے۔ اس کے علاوہ ملزم نے خود میڈیا پر آکر سری لنکن شہری کو زندگی سے محروم کرنے کا اعترافی بیان دیا تھا۔خیال رہے کہ جمعہ کے روز سیالکوٹ میں ایک لیدر فیکٹری کے ورکرز نے سری لنکن منیجر پر مذہبی پوسٹر اتارنے کا الزام لگاتے ہوئےزدوکوب کرتے ہوئے زندگی سے محروم کیا ۔ اور بعد ازاں اسکو نذر آتش کردیا ۔ پولیس نے واقعہ میں ملوث 110 سے زائد ملزمان کو حراست میں لےلیا ہے، جن کے کردار کا تعین سی سی ٹی وی فوٹیج سے کیا جا رہا ہے۔آئی جی پنجاب راؤ سردار سارے معاملہ کی خود نگرانی کر رہے ہیں۔آر پی او گوجرانولہ، ڈی پی او سیالکوٹ سمیت سینیئر پولیس افسران فیلڈ میں موجود ہیں۔باقی ملزمان کی گرفتاری کے لیے چھاپے مارے جارہے ہیں۔

One response to “سیالکوٹ واقعہ : مرکزی ملزم نے خود آگے بڑھ کر جرم کا اعتراف کیوں کیا ؟”

  1. Tasneem A Siddiqui says:

    Nothing will happen unless and until high level pressure from abroad do not come