سینیٹ الیکشن قبل از وقت کرانے کا معاملہ ،

لاہور(ویب ڈیسک) اپوزیشن کی وارننگ کے جواب میں حکومت کے سینیٹ الیکشن قبل از وقت کرانے کا معاملہ شدت اختیار کر گیا ، پیپلزپارٹی اور مسلم لیگ (ن)نے ایوان بالاکا الیکشن قبل از وقت کرانے کا اعلان مستردکردیا ہے ۔ تفصیلات کے مطابق (ن) لیگ کی نائب صدرمریم نوازکا کہناہے کہ

سینیٹ الیکشن ایک مہینہ پہلے کرائیں یا بعد میں وزیراعظم اپنی حکومت کو نہیں بچا سکتے‘ آپ جو بھی ہتھکنڈے استعمال کریں، گھر تو آپ کو جانا ہی پڑے گا اور جلدی جانا پڑے گا‘وزیر اعظم عمران خان انتخابات کرانے کا اعلان کریں گے تو کیا ہم چوڑیاں پہن کر گھر بیٹھے رہیں گے؟۔ جمعرات کو لاہورمیں صحافیوں سے گفتگو کرتے مریم نوازنے کہاکہ اگر پی ڈی ایم کے جلسوں سے فرق نہیں پڑتا تو ایسی کیا آفت اور ایمرجنسی آگئی کہ ایک ماہ پہلے سینیٹ الیکشن کا اعلان کرنا پڑا۔ عمران خان کواپنے ایم پی ایز‘ ایم این ایز پر اعتماد نہیں رہا تو شوآف ہینڈز یاد آگیا، آپ اس معاملے کو کس خوشی میں سپریم کورٹ میں گھسیٹ رہے ہیں، آئین میں ترمیم پارلیمنٹ کا کام ہے، پوری اپوزیشن مستعفی ہوئی تو آپ 500 نشستوں پر ضمنی انتخابات نہیں کرسکتے‘الیکشن کمیشن غیر آئینی احکامات ماننے سے انکار کردے‘ عمران خان قومی اداروں سے کھیل رہے ہیں، یہ خطرناک ہے۔ ہم شو آف ہینڈز کے خلاف نہیں لیکن اس اعلان کے پیچھے شفافیت نہیں، سپریم کورٹ اس کی تشریح کرسکتی ہے، نیاقانون تو نہیں بناسکتی، اس کے لیے آئینی ترمیم کی ضرورت ہے‘آرڈیننس کے ذریعے بلڈوز نہیں کرسکتے۔

Comments are closed.