شاہد آفریدی کا زبردست مشورہ

لاہور (ویب ڈیسک) پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان اور مشہور زمانہ لالا شاہد خان آفریدی نے محمد عامر کے کرکٹ کو الوداع کہنے کے اعلان پر اپنا رد عمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ پی سی بی  انتظامیہ اور محمد عامر دونوں ذمہ دار ہیں، بڑے شروع نہ کرتے تو چھوٹوں کو بات کرنے کا موقع نہیں ملتا۔

ایک نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے  شاہد آفریدی نے کہا کہ میڈیا کے ذریعے کیوں بات چیت ہورہی ہے آپس میں کمرے میں بیٹھ کر بات کریں۔ انہوں نے کہا کہ محمد عامر کا فیصلہ بھی تھوڑا سا سخت تھا، زندگی میں چیلنجز آتے ہیں جنہیں قبول کیا جاتا ہے۔  شاہد آفریدی نے کہا کہ تگڑے اور کیریکٹر والے کرکٹر چینلنجز قبول کرتے ہیں پرفارم کرکے واپس آتے ہیں۔ سابق کپتان پاکستان کرکٹ ٹیم نے کہا کہ پاکستان کرکٹ کو محمد عامر کی ضرورت ہے، محمد عامر میں ابھی ٹی 20 ون ڈے کی کرکٹ باقی ہے۔  شاہد آفریدی نے کہا کہ پاکستان کیلیے کھیلنے کا جو مزہ آتا ہے وہ کسی اور چیز میں نہیں، محمد عامر کو سوچ سمجھ کر معاملے لیکر چلنا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ عامر لیگ کرکٹ بھی کھیلیں، پاکستان سے آپ کھیل سکتے ہو چینلنج کے طور پر کارکردگی دکھائیں۔  شاہد آفریدی نے کہا کہ اب معاملہ بڑا ہوگیا ہے چیزیں سامنے آگئیں، بیٹھ کر اگر دوبارہ بات کرسکتے ہیں ختم کرسکتے ہیں چیزوں کو کوئی اتنی بڑی بات نہیں ہے۔شاہد آفریدی نے کہا کہ اگر پی سی بی نے اس طرح کہہ دیا تو اس کا مطلب یہ ہے کہ پی سی بی کا منصوبہ تھا عامر کو سائیڈ پر لگانے کا ، میں اب بھی کہوں گا پی سی بی اور محمد عامر مذاکرات کرکے معاملہ حل کریں ۔

Comments are closed.