شفقت محمود نے ایک اور ہی کہانی بیان کردی

کراچی(ویب ڈیسک)وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے کہا ہے کہ حفیظ شیخ کو مہنگائی کی وجہ سے نہیں ہٹایا گیا ہے، حفیظ شیخ کی مدت 10جون کو بجٹ کے درمیان ختم ہورہی تھی اس لئے انہیں ہٹایا گیا، پٹرول اور چینی کی قیمتیں کم ہونے سے مہنگائی پر فرق پڑے گا،جہانگیر ترین

کیخلاف کارروائی ہوئی تو پارٹی پر کوئی فرق نہیں پڑے گاکورونا قابو سے باہر ہوا تو مکمل لاک ڈاؤن کی طرف جاسکتے ہیں۔ شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ چینی کی قیمتیں بڑھنے میں جہانگیر ترین کا کوئی قصور نہیں ہے، چینی سرپلس نہ ہونے کے باوجود برآمد کی اجازت دینے والی ای سی سی قصوروارہے۔ بھارت سے تجارت کے فیصلے پر پارلیمنٹ کو اعتماد میں لینا چاہئے تھا، ن لیگ یوسف رضا گیلانی کو سینیٹ میں اپوزیشن لیڈر تسلیم نہیں کرے گی، سینیٹ میں جو کچھ ہوا اس کے بعد پیپلز پارٹی پر اعتماد بہت کم رہ گیا ۔وہ نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں میزبان حامد میر سے گفتگو کررہے تھے۔ وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے مزید کہا کہ حفیظ شیخ سے کوئی ناراضی نہیں تھی ہم نے انہیں سینیٹر کا ٹکٹ دیا مگر وہ منتخب نہیں ہوسکے،شبلی فراز نے حفیظ شیخ کو مہنگائی کی وجہ سے ہٹانے کے اپنے بیان کی تصحیح کردی ہے۔ شفقت محمود کا کہنا تھا کہ مہنگائی مجموعی طور پر کم ہوئی ہے مگر اشیائے خورد و نوش میں مہنگائی کم نہیں ہوئی، عمران خان نے مودی کو خط میں واضح کردیا ہے کہ مسئلہ کشمیر کے منصفانہ حل تک دیرپا امن قائم نہیں ہوسکتا، شوکت ترین کو وزیرخزانہ بنانے کی میرے پاس کوئی اطلاع نہیں ہے، حماد اظہر کو وزیرخزانہ کا اضافی چارج دیا گیا ہے ، حماد اظہر معیشت کو سمجھتے ہیں مستقل وزیرخزانہ بنتے ہیں تو حیرانی نہیں ہوگی۔ شفقت محمود نے کہا کہ کابینہ میں ایسے وزراء کی لمبی فہرست ہے جو شروع سے وزیر ہیں، وزیروں کے قلمدانوں میں تبدیلی ہوتی رہتی ہے ، معاونین خصوصی اور مشیر تبدیل ہوتے رہتے ہیں، مہنگائی کا تعلق انتظامی امور سے بھی ہے، صوبائی حکومتوں کو مہنگائی کم کرنے کیلئے اپنا کردار ادا کرنا پڑے گا، مجھے نہیں پتا چینی اسکینڈل میں جہانگیر ترین کیخلاف کارروائی ہورہی ہے یا نہیں ہورہی، جہانگیر ترین کا نام چینی اسکینڈل میں ہے تو کارروائی ضرور ہوگی، پی ٹی آئی عمران خان کے نیچے متحد ہے، جہانگیر ترین کیخلاف کارروائی ہوئی تو پارٹی پر کوئی فرق نہیں پڑے گا۔ شفقت محمود کا کہنا تھا کہ ترک صدر کی بیگم کے ہار والے واقعہ پر یوسف رضا گیلانی پر غصے کا اظہار کیا تھا آج بھی اپنے موقف پر قائم ہوں، بی اے پی ایک الگ سیاسی جماعت ہے وہ اپنے فیصلے کرسکتی ہے، کورونا قابو سے باہر ہوا تو مکمل لاک ڈاؤن کی طرف جاسکتے ہیں، ٹرانسپورٹ پر مکمل پابندی لگانے سے غریبوں پر اثر پڑے گا۔

Sharing is caring!

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *