صدر ٹرمپ تنہا رہ گئے

واشنگٹن (ویب ڈیسک) امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو ’’ان فٹ ‘‘ قرار دیکر اقتدار سے برطرف کرنے کے مطالبات مزید زور پکڑ گئے ہیں ،واشنگٹن ڈی سی کے فیڈرل پراسیکیوٹر کا کہنا ہےکہ کیپیٹل ہل ہنگامے پر ٹرمپ کو ملزم بھی ٹھہرایا جاسکتا ہےدوسری جانب امریکی پولیس کا کہنا ہے کہ کیپٹل ہل

میں کشیدگی کے دوران زخمی ہونے والا پولیس افسر برائین ڈی سکنیک اسپتال میں جان بحق ہے جس کے بعد اس ہنگامے میں اموات کی تعداد 5ہوگئی ہےدوسری جانب ڈونلڈ ٹرمپ سے صورتحال کو بھانپتے ہوئے یو ٹرن لے لیا ، مظاہرین کو کیپٹل ہل پر دھاوا بولنے کیلئے اکسانے اورایک روز قبل مظاہرین کی حمایت کرنے والے ٹرمپ نے اب اپنے ہی حامیوں سے منہ پھیر لیا ، ان کا کہنا ہے کہ کیپیٹل ہل پر حامیوں کے دھاوےنے مجھے مایوس کیاکانگریس عمارت پر اٹیک کی مذمت کرتا ہوں،اپنے ویڈیو بیان میں ٹرمپ نے کہاکہ پارلیمنٹ نے نتائج کی توثیق کر دی ہے، پرامن انتقال اقتدار کی اپنی بات پر قائم ہوں، 20 جنوری کو ایک نئی انتظامیہ امریکا کی باگ ڈورسنبھالے گی، تمام توجہ بائیڈن انتظامیہ کو اقتدار سونپنے پر مرکوز ہے.دریں اثناء امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی کابینہ سے استعفوں کا سلسلہ جمعےکے روز بھی جاری رہا، ٹرمپ کے وزیرتعلیم اور وزیر ٹرانسپورٹ دونوں مستعفی ہوگئے، ٹرمپ کے کئی مشیر بھی مستعفی ہوچکے ہیں۔

Sharing is caring!

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *