صف اول کے تجزیہ کاروں کی رائے

کراچی (ویب ڈیسک) نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں میزبان علینہ فاروق شیخ کے پہلے سوال کیا پی ڈی ایم اتحاد پارلیمنٹ میں بھی ٹوٹ جائے گا؟ کا جواب دیتے ہوئے تجزیہ کاروں نے کہا کہ شہباز شریف خود کو موثر اپوزیشن لیڈر کے طور پر سامنے لائیں گےایک دوسرے سوال پر

تجزیہ کاروں نے کہا کہ جہانگیر ترین کو کیسے پتا کہ سینیٹر علی ظفر کی رپورٹ میں انہیں کلین چٹ مل گئی ہے، منیب فاروق نے کہا کہ پی ڈی ایم میں اتحاد نہیں رہا تو پارلیمنٹ میں اپوزیشن اتحاد کی کوئی اہمیت نہیں ہوگی شہباز شریف کا سیاسی قد کاٹھ ایسا نہیں ہے کہ انہیں صرف خانہ پری کیلئے پارلیمانی لیڈر بنایا جائے،حسن نثار کا کہناتھا کہ پولیو زدہ پی ڈی ایم کی ٹوٹ پھوٹ کی فکر کرنے کے بجائے معاشرے کی فکر کی جائے جو ٹوٹ پھوٹ کی زد میں ہے،ریما عمر نے کہاکہ اپوزیشن جماعتوں کا اتحاد برقرار رہے یا نہ رہے پارلیمنٹ میں حکومت کیخلاف مل کر آواز اٹھائیں گی شہباز شریف کی پارٹی میں قربانیاں ہیں وہ کیوں سیاست چھوڑیں گے، مشرف کے زمانے میں بھی شہباز خاندان یرغمال تھا اب بھی یہی ہے، مظہر عباس کا کہنا تھا کہ پی ڈی ایم اتحاد پارلیمنٹ کے اندر نہیں باہر بنا ہے، پارلیمنٹ کے اندر اپوزیشن جماعتوں کی انڈراسٹینڈنگ اسی طرح چلتی رہے گی، شہباز شریف کا اب شاید باہر جانے کا ارادہ نہیں ہے وہ پارلیمنٹ میں زیادہ وقت دیں گے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *