عمران خان نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں تہلکہ خیز اضافہ کردیا

لاہور (ویب ڈیسک) پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے میں ان پر بڑھنے والے ٹیکس اور لیوی کی تفصیلات سامنے آ گئیں۔ڈیزل پر لیوی 8 روپے 44 پیسے فی لیٹر سے بڑھا کر 12 روپے 44 پیسے کر دی گئی ہے، جبکہ اس پر جی ایس ٹی 10 روپے 32 پیسے سے کم کر کے

6 روپے 75 پیسے فی لیٹر کر دیا گیا۔پیٹرول پر لیوی 9 روپے 5 پیسے سے بڑھا کر فی لیٹر 13 روپے 53 پیسے کر دی گئی ہے جبکہ اس پر سیلز ٹیکس 6 روپے 84 پیسے فی لیٹر سے کم کر کے 1 روپے 43 پیسے فی لیٹر کر دیا گیا ہے۔مٹی کے تیل پر پیٹرولیم ڈیولپمنٹ لیوی اور سیلز ٹیکس میں کوئی تبدیلی نہیں کی گئی ہے۔مٹی کے تیل پر پی ڈی ایل 2 روپے 06 پیسے فی لیٹر اور جی ایس ٹی 7 روپے 32 پیسے فی لیٹر عائد ہے۔دوسری جانب پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں رات گئے اچانک اضافہ کردیا گیا ۔حکومت نے را ت تقریباً ایک بجے کے بعد پٹرولیم مصنوعات مہنگی کرنے کا اعلان کیا ، جس کا نوٹیفکیشن بھی جاری کردیاگیا۔تفصیلات کے مطابق جمعرات اور جمعے کی درمیانی شب پٹرول کی قیمت میں 8 روپے 3 پیسے فی لیٹر اضافہ کیا گیا جبکہ ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت میں 8 روپے 14 پیسے اضافہ کیا گیا،اور نئی قیمت142.52روپے فی لٹر ہوگئی،مٹی کےتیل کی قیمت میں بھی 6روپے 27پیسے اضافہ کیا گیااس طرح مٹی کے تیل کی نئی قیمت116.53پیسے ہوگئی۔پٹرول کی قیمت میں 8 روپے 3 پیسے اضافے کے بعدنئی قیمت 145 روپے 82 پیسے ہوگئی ۔ لائٹ ڈیزل کی قیمت میں5.72روپے اضافہ ہوا اور نئی قیمت 114.07روپے فی لٹر ہوگئی۔واضح رہے ایک روز قبل ہی اپنے خطاب میں وزیراعظم عمران خان نے پٹرول قیمتوں میں اضافے کا اعلان کیا تھا،ٹی وی رپورٹ کے مطابق حکومت نے سیلز ٹیکس اور پٹرولیم لیوی کی مد میں زیادہ دباو خود برداشت کیا۔

Comments are closed.