عمران خان کا اختر مینگل کے مطالبات پر عملدرآمد کا حکم مگر اختر مینگل کا عشائیے میں شرکت سے انکار ۔۔۔ آخر ہو کیا رہا ہے ؟ اندر کی خبر

اسلام آباد(ویب ڈیسک) بلوچستان نیشنل پارٹی نے وزیراعظم کے عشائیے میں شرکت نہ کرنے کا فیصلہ کرلیا، اختر مینگل کا کہنا ہے کہ بی این پی جب حکومت کا حصہ اور اتحادی ہی نہیں رہی تو پھر عشائیے میں شرکت نہیں کرسکتے۔ذرائع کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے اتحادی جماعتوں کو آج عشائیے پر مدعو کیا ہے۔

دوسری جانب حکومت نے بلوچستان نیشنل پارٹی (بی این پی) مینگل کے 6 نکاتی ایجنڈے پر عمل درآمد شروع کردیا۔وزیراعظم عمران خان نے وفاقی وزارتوں میں بلوچستان کے 6 فیصد ملازمت کوٹہ پر عمل درآمد کی ہدایت کردی،وزیراعظم کی 6 فیصد کوٹہ پر عمل درآمد کی ہدایت وفاقی وزارتوں اور محکموں تک پہنچادی گئی۔وزیراعظم نے کوٹہ کو یقینی بنانے کیلئے ایک ماہ میں خالی آسامیوں کا ریکارڈ مہیا کرنے کی ہدایت کی ہے۔واضح رہے کہ وزیراعظم آفس کی جانب سے اختر مینگل اور جہانزیب جمالدینی کو عشایئے میں شرکت کی دعوت دی گئی تھی، لیکن سربراہ بی این پی سردرا اخترمینگل نے وزیراعظم کے عشایئے میں شرکت سے انکار کردیا ہے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ سردار اختر مینگل اپنے والد کے چیک اپ کے سلسلے میں کراچی میں موجود ہیں۔واضح رہے وزیراعظم نے آج حکومتی اور اتحادی اراکین کو عشایئے پر مدعو کرلیا ہے۔ وزیراعظم عمران خان نے جمعرات کو پارلیمنٹ ہائوس میں واقع اپنے چیمبر میں بعض وفاقی وزراء اور اراکین پارلیمنٹ سمیت اقلیتی اراکین کے وفد سے ملاقاتیں کیں۔

Sharing is caring!

Comments are closed.