قائد اعظم محمد علی جناح کی اصل قبر کہاں ہے ؟

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) مزار قائد پر موجود وہ قبر جہاں ہم فاتحہ خوانی کرتے ہیں وہ دراصل علامتی قبر ہے ، قائد اعظم کی اصل قبر کہاں موجود ہے ؟ وہ بات جو آپ کو آج سے پہلے معلوم نہیں ہوگی ۔۔۔بہت کم لوگ جانتے ہونگے کہ قائد اعظم کے مزار پر موجود

قبر جہاں ہم فاتحہ کیلئے حاضری دیتے ہیں،دراصل اس قبر کے 20,25 فٹ نیچے ایک تہہ خانے میں قائد اعظم کی اصل قبر ہے جہاں ہر کسی کو جانے کی اجازت نہیں ہے اور ہائی پروفائلز کیلئے بھی خصوصی اجازت نامے کے بعد ہی اس جگہ تک رسائی ممکن ہے مگر محترم قارئین کیا آپ جانتے ہیں پاکستان کی سب سے مقدس ہستی جہاں آسودہ خاک ہے اس جگہ کے منتظمین محض چند ٹکوں کی خاطر عیاشی کیلئے آئے لڑکے لڑکیوں کو وہ جگہ کرائے پر دیتے ہیں ۔دوسری جانب قائداعظم محمد علی جناح کی وفات کے بعد یہ بات تو طے تھی کہ ان کی تدفین کراچی میں ہوگی۔ البتہ ان کی قبر کے لئے جگہ کا انتخاب ایک اہم مسئلہ تھا۔قائداعظم کے مزار کی جگہ کے انتخاب کی ذمہ داری اس وقت کے ایڈمنسٹریٹر جناب ہاشم رضا کو سونپی گئی۔ یہ بڑا مشکل کام تھا۔ اس مقصد کے لئے چار پانچ مقامات کا جائزہ لیا گیا مگر ان میں کوئی نہ کوئی نقص پایا گیا۔بالآخر سید ہاشم رضا نے محترمہ فاطمہ جناح کے مشورہ سے موجودہ جگہ کا انتخاب کیا ۔ یہ جگہ اس لحاظ سے منفرد تھی کہ شہر کے عین وسط میں ایک بلند مقام پر واقع تھی اور شہر کی مرکزی شاہراہ کے کنارے تھی۔ اب یہاں چھ بڑی سڑکیں آکر ملتی ہیں۔موجودہ مقام پر تدفین کے بعد اس بات پر خصوصی توجہ دی گئی کہ بانیء پاکستان کی قبر پر جوبھی مزار بنایا جائے وہ نہ صرف قائداعظم کے شایان شان ہو بلکہ ان کے عظیم تخیلات اور تصورات کی جیتی جاگتی تصویر ہو۔ قائداعظم کو کراچی میں پرانی نمائش پر جس جگہ سپرد خاک کیا گیا وہ جگہ 144 ایکڑ رقبہ کا ایک ہموار قطعہ اراضی ہے اس رقبے پر ایک اندازے کے مطابق دو لاکھ مہاجرین نے جھونپڑیاں ڈال رکھی تھیں۔ قائداعظم کے انتقال کے وقت کراچی انتظامیہ کے سربراہ جناب ہاشم رضاصاحب تھے۔

Comments are closed.