مالدار خاتون کی شناخت سامنے آگئی

لاہور(ویب ڈیسک)وزیراعظم عمران خان کے مشیر جمشید چیمہ کے بچوں کو کھانے میں زندگی کو نقصان پہنچانے والی چیز ملا کر دینے کے معاملے میں انکشاف ہوا ہے کہ اس واردات کی منصوبہ بندی جمشید چیمہ کے گھر کے سابق مالک کی بیٹی نے کی۔مقدمہ مدعیہ اور بچوں کی والدہ مسرت جمشید چیمہ

کے مطابق بچوں اور فیملی کو آہستہ آہستہ مختلف مرحلوں میں زندگی سے محروم کرنے کی کوشش کے حوالے سے آج کچھ حقائق سامنے آئے ہیں۔پولیس نے ابتدائی تفتیش کے دوران ہمارے ملازمین کو گرفتار کیا اور سامنے آیا کہ ہماری فیملی کی غیر موجودگی میں مشکوک افراد ان سے ملنے آتے تھے اور قیمتی تحائف دیے جاتے تھے۔فوٹیجز کی جانچ پڑتال کے بعد پتہ چلا کہ ہمارے گھر کے سابق مالک کی بیٹی مہناز بیگم ان ملازمین سے مسلسل رابطے میں تھی اور انہیں نقد رقوم دیتی رہتی تھی۔ مبینہ طور پر ہمارے گھر کے سابق مالک محمد خان کی بیٹی کا خیال تھا یہ گھر اس کو دیا جائے گا جس کی خلاف ورزی پر وہ حسد کا شکار ہوگئی۔ہمارے خانساماں کے سامان سے پولیس نے کچھ مشکوک کیمیکل بھی قبضے میں لیے جس کو خانساماں نے کھانے میں متعدد دفعہ ملانے کا انکشاف بھی کیا۔پولیس اس معاملے کی مزید تفتیش کر رہی ہے اور اس جرم کے محرکات کی تفتیش کر رہی ہے۔انشاءاللہ اس جرم میں ملوث افراد کے خلاف ہر حد تک جایا جائے گا۔

Comments are closed.