ملزم وقار کی جان آسانی سے نہیں چھوٹے گی کیونکہ ۔۔۔۔ ملزم نے بالآخر خود بڑا اعتراف کر لیا

لاہور (ویب ڈیسک پولیس حکام کا کہنا ہے کہ لاہور کے قریب ایک خاتون کے ساتھ غلط کاری کے معاملے میں نامزد دو میں سے ایک ملزم اب پولیس کی تحویل میں ہے اور اس سے تفتیش کی جا رہی ہے۔ ترہب اصغر بی بی سی کے لیے اپنی ایک رپورٹ میں لکھتے ہیں ۔۔۔۔۔

پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ ملزم اپنے والدین اور اہلِ خانہ کے ہمراہ اتوار کی صبح لاہور کے ماڈل ٹاؤن تھانے میں پیش ہوا جہاں دیے گئے بیان میں اس نے کہا ہے کہ اس کا اس واقعے سے کوئی تعلق نہیں۔ڈی ایس پی ماڈل ٹاؤن حسنین حیدر کے مطابق ملزم اب پولیس کی تحویل میں ہے اور اسے ڈی آئی جی ہیڈ کوارٹر لے جایا جا رہا ہے۔جب ان سے ملزم گرفتاری کی تفصیلات دریافت کی گئیں تو ان کا کہنا تھا کہ کچھ دیر بعد ہی بتائی جا سکیں گی۔ایک پولیس اہلکار نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا کہ ملزم نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ اگرچہ وہ ماضی میں مرکزی ملزم کے ساتھ جرائم میں ملوث رہا ہے تاہم اس واقعے سے اس کا کوئی تعلق نہیں اور نہ ہی وہ موبائل نمبر جس کا ذکر پولیس حکام نے کیا اس کے زیر استعمال ہے۔پولیس ذرائع کے مطابق ملزم کا میڈیکل جسمانی نمونہ حاصل کر کے اسے تجزیے کے لیے بھیج دیا گیا ہے اور نتیجہ آنے کے بعد ہی اس بارے میں مزید تفصیلات سامنے آئیں گی۔گذشتہ روز صوبے کے وزیراعلیٰ کی سربراہی میں اعلیٰ حکام کی پریس کانفرنس میں پولیس کی تحویل میں موجود ملزم کے بارے میں بتایا گیا تھا کہ وہ دو ہفتے قبل ہی ضمانت پر رہا ہوئے تھے اور غالب امکان ہے کہ وہ وقوعے کے وقت مرکزی ملزم کے ساتھ موجود تھے۔پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے آئی جی پنجاب انعام غنی نے کیس کے سلسلے میں اب تک ہونے والی پیش رفت کے متعلق بتایا کہ ملزم کا پہلے ٹیسٹ ہوا تھا جس سے نمونے میچ کر گئے۔

Sharing is caring!

Comments are closed.