مولانا فضل الرحمٰن نے کوئی کسر نہ چھوڑی ، تہلکہ خیز بیان

حیدرآباد ( ویب ڈیسک) جمعیت علماءاسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمٰن نے کہا ہے کہ 26 مارچ کو قافلے ملک سے پنڈی اور اسلام آباد روانہ ہونگے جس میں ٹھاٹھیں مارتا ہوا عوام کا سمندر حکومت کو بہا لے جائے گا، حیدرآباد میں پی ڈی ایم کے جلسے سے خطاب کرتے ہوئے

مولانا فضل الرحمٰن نے کہا کہ اسٹیبلشمنٹ ماضی کی غلطیاں مانے،ہمیں الف ب نہ پڑھائیں، کچی گیم نہیں کھیلے، سیاست سیکھنی ہے تو ہماری شاگردی میں آئیں، بحرانوں سے لڑنا جانتے ہیں، ملک و قوم کی بقا‘ ووٹ اور آئین کی لڑائی لڑ رہے ہیں، تفصیلات کے مطابق حیدرآباد میں پی ڈی ایم کے جلسے سے جمعیت علماءاسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ دھاندلی سے نہیں عوام کی طاقت سے بنتی ہے‘ یہ تحریک اپنے مقصد کوپہنچے گی‘اقتدار سے ان نااہلوں کو نکال باہر نہیں کرتے ہم چین سے نہیں بیٹھیں گے، دل کو بہت بھلا لگتا ہے جب ملک کی اسٹیبلشمنٹ کہتی ہے کہ ہمارا سیاست سے کوئی تعلق نہیں ،ہم بھی چاہتے ہیں کہ آپ غیر جانبدار رہیں، ماضی میں ایسی غلطیاں ہوئیں ہیں اس لئے آپ کوقوم سے معافی مانگنی پڑے گی‘۔پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ حیدرآباد کی عوام ہمیشہ جمہوری جدوجہد میں اور آمریت کے مقابلے میں صف اول میں کھڑی ہوئی‘ جنرل مشرف‘ یحییٰ‘ ضیاءحیدرآباد کے عوام سے ڈرتے تھے‘ جنرل ضیاءالحق تو حیدرآباد کے طلبہ سے بھی ڈرتا تھا اور آج ہی کے دن ضیاءالحق نے طلبہ یونین پر پابندی لگائی تھی کیونکہ طلبہ آمریت سے نہیں ڈرتے تھے بلکہ جمہوریت کی بحالی کیلئے کردار ادا کرتے تھے‘پوچھتا ہوں کہ عمران کی حکومت انکروچمنٹ کے نام پر حیدرآباد‘ سکھر‘ لاڑکانہ میں غریبوں سے چھت چھین رہی ہے، پاکستان جیسا ملک افغانستان اور بنگلادیش کا مقابلہ نہیں کر سکتا‘ افغانستان حالت لڑائی میں ہے‘ ہم ان سے کسے چیز میں آگے ہیں اور مہنگائی میں ہیں‘ بی آر ٹی‘ بلین ٹریز‘ مالم جبا‘ فارن فنڈنگ کیس اور علیمہ باجی کی مشین میں بھی چوری اور بد عنوانی ہے ۔

Sharing is caring!

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *