میں نے نیا پاکستان بنانے کے لیے بہت کچھ کیا مگر ۔۔۔۔

اسلام آباد (ویب ڈیسک ) پاکستان تحریک انصاف کے ناراض رہنما جہانگیر ترین نے جسٹس ریٹائرڈ وجیہہ الدین کی جانب سے عائد کیئے گئے الزامات پر خاموشی توڑتے ہوئے بیان جاری کر دیاہے ۔تفصیلات کے مطابق عمران خان کے گھر کے اخراجات کی مد میں 50 لاکھ روپے ماہانہ ادا کرنے کے

الزام پر جہانگیر ترین نے ٹویٹر پر پیغام جاری کرتے ہوئے کہا کہ ’’عمران خان کے ساتھ میرے تعلقات کی موجودہ صورتحال سے قطع نظر ، سچ لازمی طور پر سامنے آنا چاہیے، میں نے نیا پاکستان بنانے کی کوشش میں پی ٹی آئی کی مدد کیلئے جو میرے بس میں تھا وہ میں نے کیا ، لیکن بنی گالہ کے اخراجات کیلئے کبھی ایک پیسہ تک بھی نہیں دیا ،ریکارڈ کی درستگی ضروری سمجھتاہوں ۔‘‘یاد رہے کہ پاکستان تحریک انصاف کے سابق رہنما جسٹس ریٹائرڈ وجیہہ الدین احمد نے دعویٰ کیا تھا کہ عمران خان کا بنی گالا کا گھر جہانگیر ترین جیسے لوگوں کے پیسے سے چلتا تھا۔بنی گالہ کا گھر چلانے کیلئے جہانگیر ترین جیسے لوگ 30 لاکھ روپے ماہانہ دیا کرتے تھے، بعد میں یہ رقم 50 لاکھ روپے ماہانہ کر دی گئی۔ان کا کہنا تھاکہ یہ سوچ بالکل غلط ہے کہ عمران خان کوئی دیانت دار آدمی ہیں جس آدمی کے جوتے کے تسمے بھی اس کے اپنے پیسوں کے نہ ہوں اسے دیانت دار کیسے کہا جا سکتا ہے؟ اس لیے عوام کو یہ غلط فہمی دور کر لینی چاہیے ۔