نامور گلوکارہ سخت مشکل میں پڑ گئی

لاہور(ویب ڈیسک)پاکستانی گلوکار علی ظفر کے وکیل نے میشا شفیع کی مبینہ سے متعلق پوسٹیں عدالت میں پیش کرکے صبا حمید سے کارروائی سے متعلق سوال پوچھ لیا۔ذرائع کے مطابق لاہور کی سیشن عدالت میں علی ظفر کی جانب سے میشا شفیع کے خلاف دائر ہتک عزت کیس میں اداکارہ صبا حمید

کے بیان پر وکلا کو جرح کے لیے طلب کر لیاگیا۔ایڈیشنل سیشن جج خان محمود نے کیس کی سماعت کی، جس میں گلوکارہ میشا شفیع کی والدہ پیش ہوئی۔علی ظفر کے وکیل عمر طارق گل نے صبا حمید پر جرح کرتے ہوئے عدالت میں میشا شفیع کے مینیجر فہد الرحمان اور ایک خاتون تالیہ مرزا کی پوسٹوں کا ریکارڈ پیش کیا۔ علی ظفر کے وکیل نے صبا حمید سے استفسار کیا کہ مینجر فہدالرحمان نے میشا کی نامناسب اور پریشرائز کرنے والی پوسٹ کی، کیا اس کے خلاف کوئی کارروائی عمل میں لائی گئی؟علی ظفر کے وکیل کے سوال کا جواب دیتے ہوئے صبا حمید نے کہا کہ میشا نے مینیجر کے خلاف کوئی کارروائی نہیں کی۔علی ظفر کے وکیل نے تالیہ مرزا کی میشا شفیع پر الزامات کے حوالے سے پوسٹ کے متعلق پوچھا تو صبا حمید نے جواب دیا کہ وہ تالیہ کو نہیں جانتیں۔عدالتی وقت ختم ہونے پر جج نے سماعت 3 دسمبر تک ملتوی کرتے ہوئے، صبا حمید کے بیان پر جرح کے لیے وکلا کو آئندہ تاریخ پر طلب کرلیا۔یاد رہے کہ میشا شفیع کی جانب سے علی ظفر پر لگائے گئے الزامات کے تناظر میں کئی ماہ سے کیس عدالت مین زیر سماعت ہے