نواب اکبر بگٹی مرحوم کی بیوہ شہزادی نرگس کے خلاف لاہور کی ایک عدالت میں کیا کیس چل رہا ہے ؟

لاہور(ویب ڈیسک) لاہور ہائی کورٹ کے مسٹرجسٹس سرداراحمد نعیم نے نواب اکبر بگٹی کی بیوہ شہزادی نرگس کی عبوری ضمانت کی درخواست میں 13 دسمبر تک توسیع کر تے ہوئے درخواست گزار کو شامل تفتیش ہونے کی ہدایت کردی کیس کی سماعت شروع ہوئی توایف آئی اے کی جانب سے عدالت میں نازیبا وڈیو

کی فرنزک آڈٹ رپورٹ پیش کی گئی ایف آئی اے کے تفتیشی افسر مدثر نے عدالت کوبتایا کہ درخواست گزار شامل تفتیش نہیں ہو رہے درخواست گزار شہزادی نرگس اپنے وکیل مقصود احمد بٹرکے ہمراہ عدالت میں پیش ہوئیں درخواست کی جانب سے موقف اختیارکیا گیاہے کہ موکل پر لگایا گیا الزام بے بنیاد ہے موکلہ کے موبائل فون کا غلط استعمال کیا گیا،نازیبا میسجز میں درخواست گزار کا کہیں ذکر نہیں،درخواست گزار ایف آئی اے کو مطلوب نہیں،درخواست گزار کی لی گئی عبوری ضمانت کنفرم کی جائے درخواست گزار کی بہو ویشا ابوبکر نے مقدمہ درج کروایا ہے،ملزمہ شہزادی نرگس کیخلاف ایف آئی اے میں مقدمہ درج ہوا،شہزادی نرگس کی اپنی بہو کی نازیباتصاویر سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کرنے کا الزام عائد کیا،مدعیہ ویشا ابو بکر شاہ زوار بگٹی کی اہلیہ ہے،مقدمہ میں بیٹا شاہ زوار بگٹی بھی ملزم ہے،اس پر اپنی بہو ویشا ابوبکر کی نازیبا تصاویر سوشل میڈیا پر وائرل کرنے کا الزام ہے، عدالت سے استدعاہے کہ ایف آئی اے کو اسے گرفتار نہ کرنے کا حکم دیتے ہوئے حتمی فیصلہ تک ملزملہ عبوری ضمانت منظور کی جائے۔

Comments are closed.