نیب نے عمران حکومت کے اتحادیوں کو خوشخبری سنا دی

راولپنڈی ( ویب ڈیسک )قومی احتساب بیورو نے چودھری برادران کے خلاف 20 سال بعد تمام کیسز بند کر دئیے۔ نیب پراسیکیوٹر نے لاہور ہائیکورٹ میں بیان دیتے ہوئے کہا کہ تمام انکوائریاں بند کر دیں۔ وکیل چوہدری برادران کا موقف تھا کہ نیب سیاسی انجینئرنگ کرنیوالے ادارہ ہے، اس کے کردار

اور تحقیقات کے غلط انداز پر عدالتیں فیصلے بھی دے چکی ہیں، موکل کا سیاسی خاندان ہے، ہمیشہ انتقام کا نشانہ بنایا جاتا رہا ہے، ڈی جی نیب کے بیان کی روشنی میں عدالت عالیہ نے چوہدری پرویز الٰہی، چوہدری شجاعت حسین اور دیگر خاندان کیخلاف انکوائری بند ہونے پر نیب کے خلاف چوہدری برادران کی درخواستیں بھی نمٹا دیں،جسٹس صداقت علی کی سربراہی میں 2 رکنی بنچ نے چوہدری برادران کی چیئرمین نیب کے اختیارات کیخلاف درخواست پر سماعت کی۔ ڈی جی نیب شہزاد سلیم رپورٹ سمیت عدالت میں پیش ہوئے۔ درخواستگزار نے موقف اپنایا کہ نیب سیاسی انجینئرنگ کرنیوالے ادارہ ہے، نیب کے کردار اور تحقیقات کے غلط انداز پر عدالتیں فیصلے بھی دےچکی ہیں، نیب نے 20 سال قبل آمدن سے زائد اثاثہ جات کی مکمل تحقیقات کیں مگر ناکام ہوا، ہمارا سیاسی خاندان ہے، سیاسی طور انتقام کا نشانہ بنایا جاتا رہا ہے۔وکیل چودھری برادران نے کہا کہ چودھری پرویز الہی کے خلاف بطور وزیر بلدیات مالی بدعنوانی کے الزامات عائد کیے گئے مگر کوئی ٹھوس شواہد نہ ملے۔

Comments are closed.