وزیراعظم عمران خان کو ایک بار پھر تلخ حقائق سے آگاہ کردیا گیا

لاہور (ویب ڈیسک) میرے کپتان آپ بلاکسی شک وشبہ کے ایمانداربہت بڑے ایماندارہوں گے لیکن اس وقت آپ کی ریاست میں مخلوق خداکی جوحالت ہے وہ ہرگزہرگزآپ کے شایان شان نہیں۔۔اس ملک کے عوام نے کبھی خوابوں میں بھی یہ نہیں سوچاتھاکہ ورلڈکپ فتح کرنے والے عمران خان کی حکمرانی اورنگرانی میں اس طرح انہیں لوٹاجائے گا۔۔

نوجوان صحافی عمر خان جوزوی اپنے ایک کالم میں لکھتے ہیں ۔۔۔۔۔۔میرے کپتان ملک اورعوام کے آج جوحالات ہیں وہ انتہائی دردناک ۔۔غمناک اورشرمناک ہے۔۔  واللہ تحریک انصاف کے کھلاڑیوں کی طرح ہمیں بھی آپ کی ایمانداری پرکوئی شک نہیں ۔ہم یہ بھی نہیں چاہتے کہ آپ کبھی تاریخ میں کسی چور گروہ کے کوئی سربراہ اور قائد شمار ہوں۔۔ لیکن انتہائی معذرت کے ساتھ پچھلے ڈھائی سال سے اس ملک کے اندرجوکچھ ہو رہاہے۔۔ جو حالات چل رہے ہیں اور آٹا۔۔ چینی۔۔ گھی۔۔ دال ۔۔بجلی اورگیس بلوں کے ذریعے جو لوٹ مار ہو رہی ہے وہ کسی چور گروہ کی خطرناک قسم کی وارداتوں سے ہرگزمختلف نہیں۔۔ لوگ اس وقت آپ کے کھلاڑیوں سے سوال کررہے ہیں کہ آپ کے کپتان اگرواقعی ایماندار اور امانت دار ہیں تو پھر ان کی سربراہی۔۔ نگرانی اورحکمرانی میں اس ملک کے اندریہ لوٹ مارکیوں ہیں۔۔؟میرے کپتان اقتدارکی کرسی پربیٹھنے والے ہرشخص کوپھرسب کچھ ٹھیک نظرآتاہے آپ بھی بنی گالہ میں عیش وعشرت کر کے کہیں یہ سمجھ رہے ہوں گے کہ سارے 22کروڑ عوام عیش وعشرت کی زندگی گزاررہے ہیں ۔۔بڑھتی مہنگائی ۔۔غربت اوربیروزگاری کے سرکاری اعدادو شمار کوبھی آپ اپوزیشن وسیاسی دشمنوںکی چال قرار دے رہے ہیں لیکن میرے کپتان حقیقت میں ایسا بالکل بھی نہیں۔۔ نہ مہنگائی اورغربت بارے اعدادوشمارکسی کی کوئی چال ہے اورنہ ہی 22کروڑ عوام آپ کی طرح کوئی مزے کی زندگی گزاررہے ہیں ۔۔ آپ کی تاریخی حکمرانی نے تو اس ملک کے اچھے بھلوں کوبھی ایک ایک وقت کی روٹی کامحتاج بنا دیاہے۔۔اس ملک میںکل تک جوپیٹ بھر کر کھاناکھایاکرتے تھے آپ کی حکمرانی میں آج ان کوبھی ایک وقت کی روٹی میسرنہیں۔۔آپ کے اردگردشہدکی مکھیوں کی طرح بھن بھن کرنے والے یہ وزیر اور مشیرمالش اورپالش میں نہ جانے آپ کوکونسے قصے اورکہاں کی کہانیاں سناتے ہیں لیکن میرے کپتان اصل قصہ اورسچی کہانی صرف اورصرف  عوام اور انکی مشکلات ہیں ۔

Sharing is caring!

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *