وزیراعظم کے مشیر شوکت ترین نے لمبی تاریخ دے دی

پشاور (ویب ڈیسک) وزیراعظم کے مشیر برائے خزانہ شوکت ترین نے کہا ہے کہ مہنگائی صرف روپے کی قدر میں کمی وجہ سے نہیں ہوئی اور تین چار ماہ میں پیٹرول کے دام کم ہونے سے مہنگائی کم ہوجائے گی۔ پشاور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شوکت ترین نے چوہدری سرور

کے بیان پر کہا کہ چوہدری سرور کو اکنامسٹ نہیں کہہ سکتے۔ آئی ایم ایف کی سٹمپ لگ جائے تو دیگر بنک آپ کو قرضہ دینے لگتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ مہنگائی صرف روپے کی قدر میں کمی وجہ سے نہیں ہوئی اور تین چار ماہ میں پیٹرول کے دام کم ہونے سے مہنگائی کم ہوجائے گی۔ شوکت ترین کا کہنا تھا کہ حکومت میں آئے تو عمران خان سعودیہ، چین، امارات اور قطر گئے۔ عمران خان نے کہا تھا کبھی کسی سے قرضہ نہیں مانگوں گا لیکن مانگا کیونکہ قرض دینے کے لیے 28 ارب ڈالر لانا تھا، قرضے دینے اور کرنٹ اکاؤنٹ خسارے کے باعث آئی ایم ایف کے پاس جانا پڑا۔ مشیر خزانہ نے بتایا کہ کراچی میں میرا ووٹ رجسٹرڈ ہی نہیں تھا، میرا ووٹ پہلے لاہور میں رجسٹرڈ تھا اور اب مردان میں رجسٹرڈ ہے، میرا شناختی کارڈ مردان سے ہے، یہاں سے سینیٹر منتخب ہوا تو پہلے کی طرح کے پی کے کیلئے کام کروں گا۔ شوکت ترین کا کہنا تھا کہ خیبرپختونخوا سے سینٹ الیکشن اس لیے لڑرہا ہوں کہ یہاں میرا سسرال ہے۔

Comments are closed.