پاکستان اور امریکہ افغانستان کے حوالے سے کس اہم معاہدے کے قریب پہنچ گئے ؟

لاہور(ویب ڈیسک)سینئرتجزیہ کارہارون الرشید نے کہاہے کہ سی این این نے خبردی پاکستان اورامریکہ افغانستان کیلئے فضائی ایکسیس دینے کے معاہدے کے قریب پہنچ گئے ،امریکی یہ کہہ رہے آئسز اور ال قاعدہ کیخلا ف کارروائی کیلئے بات چیت جاری ہے ،وزارت خارجہ نے تردیدکردی، اس میں کوئی شبہ نہیں بات چیت توہوتی رہی ہے

،لگتاہے اب بھی جاری ہے ،بعض لوگ کہہ رہے اڈے دیئے بھی جاسکتے ،اڈے دینے کاتوسوال ہی پیدانہیں ہوتا،چین اس میں بہت حساس ہوگا۔پروگرام مقابل میں گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا پینٹاگون اورپاکستانی فوج کے تعلقات ٹھیک ہیں،موجودہ صورتحال میں امریکہ ہمیں چھوڑسکتانہ ہم امریکہ کو۔ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا16/17دن ہوگئے ،یہ بات سمجھ سے بالاترہے ،معاملے میں واقعہ توایک ہی ہوا،آئی ایس پی آرنے ایک پریس ریلیزجاری کردیا،کوئی بات چیت ہوئی ہوگی تو تبھی پریس ریلیزجاری کی گئی لیکن انہیں نوٹیفکیشن کاانتظارکرناچاہئے تھا،اب معاملے کوٹال رہے ہیں۔انہوں نے کہانہایت باوثوق ذرائع یہ کہہ رہے ہیں کہ کل ایک بہت اہم شخصیت سے شہبازشریف کی راولپنڈی میں ملاقات ہوئی ،آج پھرہوئی ،اس کاکیامطلب ہے ،اسٹیبلشمنٹ کیلئے ن لیگ کوئی آپشن نہیں،اگلے الیکشن کیلئے اگرن لیگ فری اورفیئرکی گارنٹی مانگ رہی ہے توبالکل ٹھیک ہے ۔بلوچستان کے سیاسی بحران کے حوالے سے گفتگوکرتے ہوئے انہوں نے کہا میراگمان ہے کہ کیوں اسٹیبلشمنٹ اور مرکزی حکومت مداخلت نہیں کر رہی کہ اگر اکثریت ناراض ہوگئی،دونوں کانقطہ نظرامن و امان،استحکام ہے ،بی اے پی کا قائم رہنابڑاضروری ہے ۔سابق کرکٹر عامر سہیل نے پروگرام میں پاک بھارت ٹاکرے کے حوالے سے گفتگوکرتے ہوئے کہااس طرح کے میچزاعصاب شکن ہوتے ہیں،فینزکی توقعات کالیول بہت اوپرہوتاہے ،ایسے میچزمیں اعتمادکیساتھ میدان میں اترناپڑتاہے ،مخالف کوڈرے ہونے کامیسج نہ دیں۔

Comments are closed.