پاکستان کے پہلے نابینا کالم نگار نے ناقابل یقین واقعہ بیان کر دیا

لاہور (ویب ڈیسک) نامور کالم نگار سید سردار احمد پیرزادہ اپنے ایک کالم میں لکھتے ہیں ۔۔۔۔۔۔۔۔سب کو 1987ء کا کرکٹ ورلڈکپ یاد ہوگا جب عمران خان کی قیادت میں ہماری ٹیم کو شکست ہوئی۔ عمران خان نے مایوس ہوکر کرکٹ چھوڑ دی۔ جنرل ضیاء الحق نے عمران خان میں اچھے کرکٹر کی چمک دیکھ لی تھی۔ عمران خان جنرل ضیاء الحق کی

دعوت پر راولپنڈی کے فائیوسٹار ہوٹل میں مہمان ہوئے اور اس مہمان نوازی کے بعد انہوں نے دوبارہ پاکستان کرکٹ ٹیم کو جوائن کرلیا۔ اگر جنرل ضیاء ہارے ہوئے مایوس عمران خان کو حوصلہ دے کر دوبارہ کرکٹ میں نہ لاتے تو عمران خان 92ء کے ورلڈکپ کی ٹیم کے کپتان نہ ہوتے۔ اگر عمران خان 92ء کا ورلڈکپ نہ جیتتے تو شاید شوکت خانم ہسپتال نہ بنا پاتے جس کی مشہوری انہوں نے ورلڈکپ کی وننگ سپیچ میں بھی کی تھی۔ اگر عمران خان شوکت خانم ہسپتال اور ورلڈکپ کا اعزاز لے کر سیاست میں نہ آتے تو انٹرنیشنل شہرت حاصل نہ کرپاتے۔ کیا جنرل ضیاء الحق نے نواز شریف کی طرح عمران خان میں بھی کوئی چمکتا 

Sharing is caring!

Comments are closed.