چکری کے چوہدری کا وزیراعظم عمران خان کے لیے مشورہ

لاہور(ویب ڈیسک) سابق وزیر داخلہ چودھری نثار علی خان پنجاب اسمبلی کے سپیکر اور ڈپٹی سپیکر کی عدم موجودگی کے باعث پنجاب اسمبلی کا حلف نہیں اٹھا سکے،انہوں نے عدالت کا دروازہ کھٹکھٹانے کا عندیہ دیدیا ۔اس حوالے سے انہوں نے گزشتہ روز پنجاب اسمبلی کے باہر میڈیا نمائندوں سے گفتگو

میں کہاکہ آج حلف اٹھانے کا دن متعین تھا حلف لینے کا فیصلہ اس لیے کیا کیونکہ حکومت خود ساختہ آرڈیننس لا رہی ہے۔ آئین کے تحت چیئرمین پینل کے ذریعے اسمبلی کا حلف اٹھایا جا سکتا ہے۔چودھری نثار علی خان نے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ میں کسی کھیل کا حصہ نہیں، شہباز شریف سے ملاقات کی باتیں قیاس آرائیاں ہیں۔ اس ملک کو مفاہمت کی ضرورت ہے۔دو دن بعد بتاؤں گا کون حلف نہیں لینے دے رہا، پھر کھل کر بات ہوگی اور سوالوں کا جواب دے سکوں گا۔ان کا کہنا تھا کہ ایک ہفتہ پہلے پنجاب اسمبلی اور الیکشن کمیشن کو کاپی بھیج دی تھی لیکن آج کہا گیا کہ سپیکر اور ڈپٹی سپیکر کے بغیرحلف نہیں لیا جاسکتا، یہ موقف بالکل غلط ہے، عین ممکن ہے کہ میں کل یا پرسوں اس معاملے کو لے کر عدالت چلا جاؤں۔انہوں نے کہا کہ حکومت آرڈیننس میں ڈس کوالیفکیشن کا اضافہ کر رہی ہے، مجھے رات کے اندھیرے میں آرڈیننس لانے پر اعتراض ہے۔ پچھلے الیکشن میں صوبائی اسمبلی سے 34 ہزار کی لیڈ سے منتخب ہوا تھا۔وزیراعظم کے بارے میں بات کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ عمران خان کے اس وقت بہت سارے دوست ہیں، ان کو مشورے کی ضرورت نہیں، پھر بھی میں ان سے کہوں گا کہ ٹھنڈا کرکے کھائیں۔، آج اس ملک کو انتہائی ضرورت ہے کہ افہام و تفہیم اور قوم کو متحد کیا جائے، پاکستانی قوم کو تقسیم نہ کیا جائے، اس ملک کو مفاہمت کی ضرورت ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *