چھوٹے میاں نے بلاول بھٹو اور پی ڈی ایم کو بڑے کام کا مشورہ دے دیا

لاہور(ویب ڈیسک ) بلاول بھٹو زرداری کی کوٹ لکھپت میں قید شہباز شریف سے ملاقات کی تفصیلات سامنے آگئی ۔ دونوں رہنماؤں نے عہد کیا کہ پی ڈیم ایم میں کوئی دراڑ نہیں ڈال سکتا اور نہ ہی کسی کی کوشش کامیاب ہونے دیں گے ، اپنے احتجاج سے عمران خان کو استعفے پر

مجبور کر دیں گے ۔ شہباز شر یف کا کہنا تھا کہ فوری استعفوں کی بجائے ڈائیلاگ کی طرف جایا جائے ۔یاد رہے کہ کل بلاول بھٹو نے کوٹ لکھپت قید خانے میں میاں شہباز شریف سے ملاقات کی اور ان سے والدہ کے انتقال پر تعزیت کا اظہار کیا، اس ملاقات میں لانگ مارچ اور استعفوں کے حوالے سے بھی مشاورت ہوئی، ملاقات کے بعد میڈیا نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے بلاول نے کہا کہ حکومت کی ضد اور انا کی وجہ سے شہباز شریف کو قید میں رکھا گیا ہے ، عمران خان نے اپنے ارد گرد موجود مالی بدعنوان عناصر کو تحفظ دیا ہے ، بلاول بھٹو نے شہبازشریف سے استعفوں کے معاملے پر بات چیت کی جس پر میاں شہبازشریف نے مشورہ دیا کہ فوری استعفوں کی بجائے ڈائیلاگ کی طرف جایا جائے ، ڈائیلا گ سے معاملات حل کرنے کی کوشش کی جائے ، استعفے ضرور لیں مگر استعمال کا ا بھی مناسب وقت نہیں، میری ذاتی رائے میں استعفوں کا ا ستعمال آخری کارڈ ہے ، نوازشریف بھی فی الحال سندھ اسمبلی کی تحلیل نہیں چاہتے ہیں، بلاول کی سوپ اورڈرائی فروٹس سے تواضع کی گئی جو شہبازشریف کے گھر سے آئے تھے ۔

Sharing is caring!

Comments are closed.