کورونا دم توڑنے لگا : وائرس کے مریضوں میں کیا حیران کن تبدیلی آنا شروع ہو گئی ؟بڑی خوشخبری

کراچی (ویب ڈیسک) اٹلی کے وبائی امراض کے ماہر ڈاکٹر نے دعویٰ کیا ہے کہ کورونا وائرس دنیا بھر میں کمزور پڑ رہا ہے اور توقع ہے کہ یہ اپنی موت آپ مر جائے گا، ویکسین کی ضرورت بھی پیش نہیں آئے گی۔ غیر ملکی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق، ڈاکٹر میٹیو بسیٹی سان مارٹینو

اسپتال میں کام کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ممکن ہے کہ سماجی فاصلے کی حکمت عملی کی وجہ سے وائرس جینیاتی طور پر تبدیل ہو کر اب کمزور پڑ گیا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ وائرس میں اب زیادہ جان باقی نہیں رہی اور اس کی ممکنہ وجہ اس مسلسل ہونے والی جینیاتی تبدیلیاں ہو سکتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ میری رائے کے مطابق، وائرس کی تیزی آہستہ آہستہ کمزور پڑ گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ مارچ اور اپریل میں اموات اور متاثرین کے نمونے بالکل مختلف تھے، لوگ جب ایمرجنسی وارڈز میں آ رہے تھے تو انہیں سنبھالنا مشکل ہو رہا تھا کیونکہ انہیں آکسیجن کی سخت ضرورت تھی، کچھ کو نمونیا بھی ہوگیا تھا۔ لیکن گزشتہ ماہ سے صورتحال تبدیل ہوگئی ہے، مارچ میں وائرس ایک جارحانہ شیر جیسا تھا لیکن اب یہ جنگلی بلی جیسا ہوگیا ہے، صورتحال یہ ہے کہ ماضی کے برعکس 80؍ اور 90؍ سال تک کے بوڑھے افراد بھی اب بیڈ پر لیٹنے کی بجائے کرسی پر بیٹھ کر بغیر کسی مدد کے سانس لے رہے ہیں۔

Sharing is caring!

Comments are closed.