کون کہتا ہے ہم ہار گئے ۔۔۔۔۔؟؟؟

دبئی (ویب ڈیسک) پاکستان کے مایہ ناز فاسٹ باؤلر شاہین شاہ آفریدی نے کہا ہے کہ آسٹریلیا کے خلاف ہم ہارے نہیں بلکہ ہم نے سبق سیکھا ہے ۔سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنے بیان میں انہوں نے کہا کہ ’’ پاکستان کو ہم نے سب کچھ دیا اور پاکستان کیلئے سب کچھ کرتے رہیں گے۔

ہم ہارے نہیں بلکہ ہم نے سبق سیکھا ہے۔‘‘انہوں نے مزید کہا کہ ’’ انشاء اللہ ہم مضبوط ہو کر واپس آئیں گے اور عوام کے ہونٹوں پر مسکراہٹیں بکھیرتے رہیں گے۔‘‘دوسری جانب پاکستان کرکٹ ٹیم کے کپتان بابراعظم نے کہا ہے کہ سیمی فائنل میں ہم بطور ٹیم اچھا نہیں کھیلے ، میچ کے بعد ڈریسنگ روم میں کھلاڑیوں سے گفتگو کرتے ہوئے بابراعظم کا کہنا تھا کہ کوئی کسی پر انگلی نہ اٹھائے ، ہم ٹھیک نہیں کھیلے ۔تفصیلات کے مطابق آسڑیلیا کے خلاف سیمی فائنل ہارنے کے بعد ساری ٹیم جب ڈریسنگ روم میں اکٹھی ہوئی تو کھلاڑی کافی مایوسی کا شکار تھے ۔ جس پر قومی ٹیم کے کپتان بابراعظم نے کہا کہ سب کو معلوم ہے کہ ہم نے کہاں غلط کیا اور کہاں ہمیں بہتر کرنا چاہیے تھا، ہمیں اس میچ سے سیکھنا ہے۔اس موقع پر بابر اعظم نے کہا کہ کسی پر کوئی انگلی نہ اٹھائے، ہم نے بطور ٹیم اچھا نہیں کھیلا ۔انہوں نے کہا کہ ہار گئے تو کوئی بات نہیں اس سے سیکھیں گے اور آگے جو کرکٹ کھیلیں گے اس میں ایسی غلطیاں نہیں دہرائیں گے۔بابر اعظم کا کہنا تھا کہ ’ہمارے درمیان بہت بہترین ماحول رہا، ہر میچ میں ہر شخص نے ذمہ داری کا مظاہرہ کیا ہے، ہم کوشش پوری کریں گے اور نتائج خود بخود ہمارے ہاتھ میں آتے رہیں گے‘۔ڈریسنگ روم میں کھلاڑیوں کو حوصلہ دیتے وقت بابراعظم نے یہ بھی کہا کہ اس ہار پر دکھ تو بہت ہے تاہم یہ وقت ایک دوسرے کو حوصلہ دینے کا ہے۔ ‘حسن علی تھوڑا ڈاؤن ہے، اسے حوصلہ دیں گے۔بابر اعظم نے میچ کے بعد پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ ’آج کا دن بہت مایوس کن تھا، ہم نے اچھے رنزکئے۔ان کا کہنا تھا کہ ’مجھے پورا اعتماد ہے کہ ہم اپنی اچھی کارکردگی کو جاری رکھیں گے، کیچز ڈراپ ہوئے اگر وہ نہ ہوتے تو شاید صورتحال کچھ اور ہوتی، ہم اپنی غلطیوں سے سیکھیں گے‘۔حسن علی کے اہم کیچ چھوڑنے کے حوالے سے سوال کا جواب دیتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ حسن علی پاکستان کا اہم باؤلر ہے اور ہمیشہ اس نے میچ جتوایا ہے، وہ تھوڑا ڈاؤن ہے تاہم اسے حوصلہ دیں گے۔

Comments are closed.